Voice of Khyber Pakhtunkhwa
Thursday, December 1, 2022

پشاور:مکمل طور پر ناکارہ دل ،پھیپھڑوں کے علاج کے لئے جدید ٹیکنالوجی متعارف

پشاور انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی میں مکمل طور پر ناکارہ دل اور پھیپھڑوں کے علاج کے لئے جدید ٹیکنالوجی متعارف.  پی آئی سی میں جدید ٹیکنالوجی(ایکمو) کی مدد سے دل اور پھیپھڑوں کا طریقہ علاج شروع کردیا گیا ہے۔

ہسپتال میں ایکسٹرا کارپوریل ممبرین آکسیجن (ایکمو ) مشین کے ذریعے مکمل طور پر ناکارہ دل اور پھیپھڑوں کو فعال رکھا جاتا ہے۔

خیبر پختونخوا میں پہلی بار دل کے مریضوں کے لئے ایکمو ٹیکنالوجی کا استعمال کیا جا رہا ہے۔دوران سرجری دل اور پھیپھڑوں کے ناکارہ ہونے کی صورت میں جدید مشین سے بیک وقت دونوں کو زندہ رکھا جاتا ہے۔

سنئیر کارڈیک سرجن اور اسسٹنٹ پروفیسرڈاکٹر عبدالناصر اس نوعیت کی سرجری ٹیم کو لیڈ کررہے ہیں۔ عارضی طور پر مکمل ناکارہ دل اور پھیپھڑے والے مریضوں کو ہارٹ اینڈ لنگز مشین پر ہفتوں تک زندہ رکھا جا سکتا ہے۔

ڈاکٹر عبدالناصر کا کہنا ہے کہ اس مشین سے دل اور پھیپھڑوں کو ٹھیک ہونے کے لیے آرام دیا جا سکتا ہے۔ حال ہی میں ایک انتہائی بیمار خاتون کا دل آپریشن کے بعد ایکمو مشین پر 4 دن کے بعد صحت یاب ہوا۔صحت یاب ہونے پر ایمرجنسی بنیاد پر خاتون کے دل کا والو تبدیل کیا گیا۔

 پی آئی سی ترجمان کے مطابق ابتدائی طور پر یہ سروس پی آئی سی سے آپریشن کرنے والے کمزور صحت دل کے مریضوں کے لئے میسر ہو گی۔ٹیکنالوجی کی کامیابی سے چلانے کے لیے ایک بڑی ٹیم اور اخراجات کی ضرورت ہوتی ہے انکامزید کہنا ہے کہ ہر مریض پر 30 لاکھ روپے تک کا خرچہ آتا ہے۔ ایکمو ٹیکنالوجی اور طریقہ علاج کو صحت کارڈ میں شامل کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے۔

About the author

Leave a Comment

Add a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Shopping Basket