Voice of Khyber Pakhtunkhwa
Friday, September 30, 2022

میر علی بازار سے تجاوزات ہٹایے جایے

شمالی وزیرستان کے دوسرے بڑے شہر میرعلی بازار میں تجاوزات کی بھر مار سے نہ صرف ٹریفک بلکہ پیدل چلنے والوں کیلئے بھی راستہ نکالنا ناممکن ہو کر رہ گیاہے۔ اپریشن ضرب عضب میں میرانشاہ اور میرعلی کے دونوں بازار مکمل طور پر مسمار کئے گئے تھے جس کے بعد دونوں بازاروں کو نئے سرے سے تعمیر کیا گیا اورسڑکوں کی کشادگی بھی گئی۔ حکومت کی طرف سے میرعلی بازار کی از سر نوتعمیر کیلئے حدبندی اور نقشے وغیرہ تک فراہم کئے گئے جس میں ٹریفک پلان تیار کیا گیا اور مارکیٹوں کو از سر نو تعمیر کروائے گئے تاہم ایک سال کے اندر اندر میرعلی اور میرانشاہ کے بازاروں میں بے ہنگم ٹریفک اور مارکیٹ مالکان کی طرف سے ناجائز تجاوزات کی وجہ سے دونوں بازاروں کی کشادگی ختم ہو گئی جس کے باعث دن بھر ٹریفک کا جام ہو نا ایک معمول بن چکا ہے۔خاص طور پر میرعلی بازار میں مصروف بیچی روڈ پر تو پیدل چلنے والوں کو بھی راستہ نہیں مل رہا۔ اس ساری صورتحال پر ٹریفک پولیس نے بھی انکھیں موندھ لی ہیں اور بازار میں ان کی موجود گی دیکھائی نہیں دے رہی۔ میرعلی کے عوامی حلقوں نے ڈی پی او نارتھ وزیرستان سے مطالبہ کیا ہے کہ میرعلی اور میرانشاہ بازاروں میں متعین ٹریفک اہلکاروں کو ڈیوٹی کا پابند بنایا جائے اور بازار سے تجاوزات ہٹاکر لوگوں کو امدو رفت کیلئے راستہ فراہم کیا جا ئے ۔

About the author

Leave a Comment

Add a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Shopping Basket