Voice of Khyber Pakhtunkhwa
Thursday, October 6, 2022

سال 2020 میں دنیا سے رخصت ہونے والی پاکستانی شخصیات

سال 2020ء گزرگیا لیکن گلشن ویران کر گیا۔ کئی اہم سیاسی، سماجی اور مذہبی رہنما رخصت ہوئے- ان شخصیات نے اپنے ملک کے لئے بیش قیمت قربانیاں دی ہیں- آج وہ ہم میں نہیں رہے لیکن ان کی یادیں ہمیشہ ساتھ رہیں گی- آج ہم اس تحریر میں ان شخصیات کو یاد کریں گے اور انھیں خراج عقیدت پیش کریں گے۔

طارق عزیز

طارق عزیز 1936ء کو جالندھر میں پیدا ہوئے-  پاکستان ٹیلی ویژن پر نمودار ہونے والی پہلی شخصیت تھے- 1964ء میں جب پی ٹی وی کا آغاز ہوا تو لوگ طارق عزیز سے آشنا ہوئے- 1974ء میں نیلام گھر کا آغاز کیا جو ان کی وجہ شہرت بنا- بعد میں نیلام گھر سے بزم طارق عزیز شو میں تبدیل ہوگیا- طارق عزیز نے کئی فلموں میں بھی کام کیا۔ اس کے علاوہ قومی اسمبلی کے رکن بھی رہ چکے ہیں- 17 جون

2020ء کو اس دار فانی سے کوچ کرگئے- لیکن ان کے یہ الفاظ ہمیشہ لوگوں کے کانوں میں گونجتے رہیں گے ” دیکھتی آنکھوں اور سنتے کانوں کو طارق عزیز کا سلام پہنچے۔

میر ظفراللہ خان جمالی

ظفراللہ خان جمالی یکم جنوری 1944ء کو ڈیرہ مراد جمالی میں پیدا ہوئے- 2002ء میں انھوں نے پاکستان کے پندرھویں وزیراعظم کی حیثیت سے حلف اٹھایا۔ وہ بلوچستان سے منتخب ہونے والے پہلے وزیراعظم تھے- 2013ء سے 2018ء تک قومی اسمبلی کے  رکن رہے- 2 دسمبر 2020ء کو جمالی صاحب راولپنڈی میں انتقال کرگئے۔

میر حاصل خان بزنجو

میر حاصل بزنجو 3 فروری 1954ء کو پیدا ہوئے- وہ نیشنل پارٹی کے بانی رہنما تھے- بلوچستان کے حقوق کے لئے آواز اٹھانے والوں میں حاصل بزنجو کا نام ہمیشہ یاد رکھا جائے گا- نواز شریف حکومت میں  2017ء سے 2018ء تک وفاقی وزیر رہے- 20 اگست 2020ء کو میر حاصل بزنجو فانی دنیا چھوڑ کر چلے گئے۔

سید منور حسن

سید منور حسن 5 اگست 1941ء کو ہندوستان کے شہر دہلی میں پیدا ہوئے- 1977ء میں وہ قومی اسمبلی کے رکن منتخب ہوئے. – قاضی حسین احمد کے بعد جماعت اسلامی کے چوتھے امیر بنے- ان کی جرات اور استقامت کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا- 26 جون 2020ء کو شدید علالت کے بعد انتقال کرگئے۔-

فخرالدین جی ابراھیم

فخرالدین جی ابراھیم 12 فروری 1928ء کو ہندوستان کے شہر احمدآباد میں پیدا ہوئے- فخرالدین جی سینئر وکیل اور جج تھے-  14 جولائی 2012ء کو آپ الیکشن کمیشن آف پاکستان کے 24 ویں چیف بن گئے-آپ 7 جنوری 2020ء کو انتقال کرگئے۔

سید فضل آغا

بلوچستان سے تعلق رکھنے والے سید فضل آغا 1946ء میں پیدا ہوئے- آپ جمعیت علماء اسلام پاکستان کے سرکردہ رہنماوں میں شمار ہوتے تھے- 18 اگست 1999ء کو آپ بلوچستان کے گورنر مقرر ہوئے- 1988ء سے 1991ء تک ڈپٹی چیئرمین سینیٹ رہے۔

نعمت اللہ خان

نعمت اللہ خان یکم اکتوبر 1930ء کو اجمیر، ہندوستان میں پیدا ہوئے- آپ جماعت اسلامی پاکستان کے متحرک رہنما تھے- تحریک اسلامی کے لئے ان کی خدمات ہمیشہ یاد رکھی جائیں گی- آپ شعبہ درس وتدریس سے بھی وابستہ رہے- 2001ء سے 2005 تک کراچی کے مئیر یعنی ناظم رہے- اس دوران آپ نے کراچی کی بہت خدمت کی- یہی وجہ تھی کہ کراچی کے لوگ آج بھی نعمت اللہ خان کو کراچی کے بہترین ناظم سمجھتے ہیں- موصوف  15 فروری 2020ء کو کراچی میں انتقال کرگئے-

نعیم الحق

نعیم الحق 11 جولائی 1949ء کو پیدا ہوئے- آپ کا شمار پاکستان تحریک انصاف کے بانی رہنماوں میں کیا جاتا ہے-نعیم الحق پاکستان تحریک انصاف سندھ کے صدر تھے- موجودہ حکومت میں وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی تھے-آپ 15 اگست 2020ء کو دو سال کی علالت کے بعد اس دار فانی سے رخصت ہوگئے۔

مولانا عادل خان

مولانا عادل خان 1957ء کو پیدا ہوئے- 1992ء میں آپ نے کراچی یونیورسٹی سے اسلامک کلچرمیں پی ایچ ڈی کی۔ 2010ء سے 2018ء تک انٹرنیشنل اسلامک یونیورسٹی ملائشیا میں پڑھاتے رہے-  اس کے بعد وہ جامعہ فاروقیہ کراچی میں پڑھاتے رہے- آپ وفاق المدارس العربیہ کے کمیٹی کے ممبر بھی رہ چکے ہیں- 10 اکتوبر 2020ء کو شاہ فیصل کالونی میں نامعلوم افراد کے ہاتھوں شہید ہوگئے-

 ڈاکٹر مبشر حسن

ڈاکٹر مبشر حسن 21 جنوری 1922ء کو پانی پت، ہندوستان میں پیدا ہوئے- نومبر 1967ء میں پاکستان پیپلز پارٹی کا جنم آپ کے ہی گھر میں ہوا-  1971ء میں آپ فنانس منسٹر بن گئے- آپ کا شمار ذوالفقار علی بٹھو کے دیرینہ اور وفادار ساتھیوں میں ہوتا تھا- 14 مارچ 2020ء کو آپ 98 برس کی عمر میں انتقال کرگئے۔

آیات اللہ درانی

آیات اللہ درانی یکم جنوری 1956ء کو مستونگ، بلوچستان میں پیدا ہوئے- آپ کا سیاسی تعلق پاکستان پیپلز پارٹی سے تھا- 2008ء میں وفاقی وزیر بھی رہے- کوویڈ-19 کی وجہ سے 5 جولائی 2020 کو کوئیٹہ میں انتقال کرگئے۔

ایڈمرل فصیح بخاری

ایڈمرل فصیح بخاری 8 مارچ 1942ء کو پیدا ہوئے- 1997ء سے 1999ء تک وہ پاکستان نیوی کے سربراہ رہے- اس کے علاوہ آپ نیب کے چیرمیئن بھی رہ چکے ہیں- فصیح بخاری 1965ء اور 1971ء کی جنگیں لڑچکے ہیں- آپ کو ستارہ امتیاز، نشان امتیاز اور حلال امتیاز جیسے قابل فخر اعزازات سے نوازا گیا ہے- 24 نومبر 2020ء کو آپ دنیا چھوڑ  گئے۔

صبیحہ خانم

پاکستانی اداکارہ صبیحہ خانم 16 اکتوبر 1935ء کو گجرات میں پیدا ہوئیں- آپ نے متعدد کامیاب فلموں میں کام کیا اسی وجہ سے آپ کو ” پاکستانی سینیما کی خاتون اول” کے نام سے یاد کیا جاتا ہے- صبیحہ خانم 13 جون 2020ء کو انتقال کرگئیں۔

کامیڈین امان اللہ خان

مشہور کامیڈین امان اللہ خان 1950ء کو لاہور میں پیدا ہوئے- آپ نیو نیوز اور دنیا نیوز میں بھی بطور کامیڈین کام کرچکے ہیں- 6 مارچ 2020ء کو آپ دنیا چھوڑ کر چلے گئے۔

بیگم شمیم اختر

بیگم شمیم اختر سابق وزیراعظم نواز شریف اور شہباز شریف کی والدہ تھیں- آپ 9 مارچ 1927ء کو لاہور میں پیدا ہوئیں- محترمہ 2013ء سے 2018ء تک صوبائی اسمبلی کی رکن رہیں- 22 نومبر 2020ء کو بیگم شمیم لندن میں انتقال کرگئیں۔

خادم حسین رضوی

مذہبی اسکالر خادم حسین رضوی 22 جون 1966ء کو اٹک میں پیدا ہوئے- آپ تحریک لبیک پاکستان کے بانی تھے- خادم رضوی 19 نومبر 2020ء کو لاہور میں وفات پاگئے۔

جسٹس وقار احمد سیٹھ

وقار احمد سیٹھ 16 مارچ 1966ء کو ڈیرہ اسماعیل خان میں پیدا ہوئے- آپ جون 2018ء سے نومبر 2020ء تک پشاور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس رہے- 12 نومبر 2020ء کو وقار سیٹھ کوویڈ-19 کی وجہ سے انتقال کرگئے۔

محمد جادم منگریو

جادم منگریو مسلم لیگ فنکشنل کے مرکزی رہنما تھے- آپ 2008ء میں قومی اسمبلی کے رکن منتخب ہوئے- اپنے دور میں وہ ریلوے کے وزیر بھی رہ چکے ہیں- آپ 25 نومبر 2020ء کو کوویڈ-19 سے وفات پاگئے۔

کلثوم پروین

مسلم لیگ کی رہنما کلثوم پروین 1945ء میں پیدا ہوئیں- آپ 2013ء سے موت تک سینیٹر رہیں- کلثوم پروین 21 دسمبر 2020ء کو اسلام آباد میں وفات پاگئیں۔-

About the author

Leave a Comment

Add a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Shopping Basket